Woh Rajgatha Ke Asoon Khawab Taari Tha

وہ رتجگاتھا کہ افسون خواب طاری تھا

وہ رتجگاتھا کہ افسون خواب طاری تھا

دیئے کی لو پہ ستاروں کا رقص جاری تھا

میں اس کو دیکھتا تھا دم بخود تھا حیراں تھا

کسے خبر وہ کڑا وقت کتنا بھاری تھا

گزرتے وقت نے کیا کیا نہ چارہ سازی کی

وگرنہ زخم جو اس نے دیا تھا کاری تھا

دیار جاں میں بڑی دیر میں یہ بات کھلی

مرا وجود ہی خود ننگ دوست داری تھا

کسے بتاؤں میں اپنی نوا کی رمز اخترؔ

کہ حرف جو نہیں اترے میں ان کا قاری تھا

اختر ہوشیارپوری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(769) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Akhtar Hoshiarpuri, Woh Rajgatha Ke Asoon Khawab Taari Tha in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 45 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Akhtar Hoshiarpuri.