Mohabbat

محبت

تم اپنے کمرے میں گہری تنہائیوں میں گم تھے

گھڑی کی ٹک ٹک جو سوئی کو ٹیکتے گزرتی

تمہیں یہ محسوس ہونے لگتا

کہ جیسے سر پر کئی ہتھوڑے برس رہے ہیں

تمہاری کرسی کی چرچراہٹ

تمہاری تنہائیوں پہ لگتا کہ بین کرتی کوئی ردالی

ادھر میں اپنے جہان‌ رنگیں میں جی رہی تھی

کہ میرے اطراف زندگی تھی

بہار تازہ بھی دل کشی تھی

حسیں ملائم سی روشنی تھی

پھر ایک دن اتفاق سے مل گئے تھے ہم تم

محبتوں کے اسیر ہو کر چلے تھے ہم تم

مگر سفر میں نہ جانے کیسے کہاں پے آخر

یہ موڑ آیا

نصیب نے پھر یہ دن دکھایا

حقیقتوں کو زوال آیا

تم آج اپنے جہان رنگیں میں جی رہے ہو

میں اپنے کمرے میں گہری تنہائیوں میں گم تھا

عنبرین حسیب عنبر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(882) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ambareen Haseeb Ambar, Mohabbat in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 30 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ambareen Haseeb Ambar.