مشہور شاعر امجد مرزا امجد کی شاعری ۔ نظمیں اور غزلیں

زہر پھیلا ہے دہر میں روح بھی مہمان ہے

امجد مرزا امجد

اس کوچے میں جب بھی جائیں آنکھیں نیر بہائیں

امجد مرزا امجد

تیری میری سانجھی گل سی سانجھی زویں اسمان

امجد مرزا امجد

اک ڈھیر مٹی نال مٹی ہو کے میں وی مٹی ہوواں

امجد مرزا امجد

سب تو اچی ماں دی ہستی اللہ دے شہکاراں چہ

امجد مرزا امجد

کر کے وخت جنہاں نوں جوان کیتا انہاں ویکھ کے اج حیران ہوئیاں

امجد مرزا امجد

ہوواں کول تے ونڈاں دکھ سب دے،کراں کی،جے بیٹھاں میں دور ہوئیاں

امجد مرزا امجد

ہر وقت مری جاں تجھ کو ہم آنکھوں میں بسائے جاتے ہیں

امجد مرزا امجد

چھا گئی ہر سو گھٹا جو کالی آنکھ میں آنسو آئے

امجد مرزا امجد

جس نال سچا پیار ہو جائے اوہ کیویں بھل جاندا اے

امجد مرزا امجد