Beete Hue Lamhat Ko Pehchaan Main Rakhna

بیتے ہوئے لمحات کو پہچان میں رکھنا

بیتے ہوئے لمحات کو پہچان میں رکھنا

مرجھائے ہوئے پھول بھی گلدان میں رکھنا

کیا جانیں سفر خیر سے گزرے کہ نہ گزرے

تم گھر کا پتہ بھی مرے سامان میں رکھنا

کیا دن تھے مجھے شوق سے مہمان بلانا

اور خود کو مگر خدمت مہمان میں رکھنا

کیا وقت تھا کیا وقت ہے اس سوچ سے حاصل

چھوڑو جو ہوا کیا اسے میزان میں رکھنا

انسان کی نیت کا بھروسہ نہیں کوئی

ملتے ہو تو اس بات کو امکان میں رکھنا

پرسش ہے بہت سخت وہاں فرد عمل کی

کچھ نعت کے اشعار بھی دیوان میں رکھنا

مخلص ہو رہو ٹوکا ہے کس نے تمہیں انجمؔ

رفتار زمانہ بھی مگر دھیان میں رکھنا

انجم خلیق

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(478) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Anjum Khaleeq, Beete Hue Lamhat Ko Pehchaan Main Rakhna in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 28 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Anjum Khaleeq.