Achay Mausam Mein Tug O Taaz Bhi Kar Laita Hon

اچھے موسم میں تگ و تاز بھی کر لیتا ہوں

اچھے موسم میں تگ و تاز بھی کر لیتا ہوں

پر نکل آتے ہیں پرواز بھی کر لیتا ہوں

تجھ سے یہ کیسا تعلق ہے جسے جب چاہوں

ختم کر دیتا ہوں آغاز بھی کر لیتا ہوں

گنبد ذات میں جب گونجنے لگتا ہوں بہت

خامشی توڑ کے آواز بھی کر لیتا ہوں

یوں تو اس حبس سے مانوس ہیں سانسیں میری

ویسے دیوار میں در باز بھی کر لیتا ہوں

سب کے سب خواب میں تقسیم نہیں کر دیتا

ایک دو خواب پس انداز بھی کر لیتا ہوں

انجم سلیمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(242) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Anjum Saleemi, Achay Mausam Mein Tug O Taaz Bhi Kar Laita Hon in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 101 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Anjum Saleemi.