Chand Taare Jisse Har Shaab Dekhain

چاند تارے جسے ہر شب دیکھیں

چاند تارے جسے ہر شب دیکھیں

ہم بھی اس شوخ کو یا رب دیکھیں

یوں ملیں ان سے کہ اپنا چہرہ

وہ بھی حیران ہوں کل جب دیکھیں

پہلے بس دل کو خبر تھی دل کی

اب وفا عام ہوئی سب دیکھیں

قرب میں کیا ہے جو دوری میں نہیں

تم جو آؤ تو کسی شب دیکھیں

جی میں ہے پھر کریں اظہار وفا

پھر ترے لرزے ہوئے لب دیکھیں

میں کہ ہوں ایک ہی آشفتہ خیال

لوگ ہر بات میں مطلب دیکھیں

جو کسی نے کبھی دیکھے نہ سنے

وہ تماشے وہ فسوں اب دیکھیں

آج تو یوں گلے لگ جاؤ کہ بس

پھر تو جانے تمہیں کب کب دیکھیں

لاکھ پتھر سہی وہ بت انجمؔ

وہ گھڑی ہم سے ملے تب دیکھیں

انوار انجم

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(447) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Anwar Anjum, Chand Taare Jisse Har Shaab Dekhain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 26 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Anwar Anjum.