Aik Khawahish

ایک خواہش

یہ خواہش ہے

کہ میں گیلی زمیں پر

اپنے دائیں ہاتھ کی انگلی سے

اک بے حاشیہ تصویر کھینچوں

جو مرے محبوب کے چہرے کے تجریدی تصور سے

مزین ہو

ہوا، گلشن کی دیواروں کے روزن سے

ادھر آئے

تو اس تصویر میں اپنے معطر رنگ بو دے

مرے خاکے کی تجریدیں مٹا دے

اٹھا کر گیلی مٹی سے

سجا دے میری آنکھوں میں

یہ خواہش ہے میری

انور سدید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(672) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Anwar Sadeed, Aik Khawahish in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 22 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Anwar Sadeed.