Mitti Sona Ho Sakti Hai

مٹی سونا ہو سکتی ہے!

ہم بھٹکتے رہتے ہیں

اپنے اندر

اور نہیں وا کرتے

ایک دوسرے کی جانب

کھلنے والی کھڑکیاں!

محفوظ جنتیں

لوگوں کی آنکھوں سے دور

لپٹی ہوتی ہیں

ویران رستوں کی دھول کے ساتھ

اورجنگلوں کے گھنے درختوں کی

چھتر چھایا میں!

معمولات کا عفریت

اندھا ہوتا ہے

نہیں دیکھ سکتا

روپوش جگہیں

جہاں گلابوں کی فصل اگتی ہے اورجھیلوں میں

چاندنی رقصاں رہتی ہے

اور

جہاں مٹھی بھر خاک سے ڈھلے جسم

سونا ہو جاتے ہیں!

عارفہ شہزاد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(542) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arifa Shahzad, Mitti Sona Ho Sakti Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 63 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arifa Shahzad.