Mere Ashaar Tamooj Pey Ju Aaye Hue Hain

میرے اشعار تموج پہ جو آئے ہوئے ہیں

میرے اشعار تموج پہ جو آئے ہوئے ہیں

آب حیرت سے یہ مضمون اٹھائے ہوئے ہیں

شوخیاں کام نہ آئیں تو حیا دھر لے گی

اس نے آنکھوں کو کئی داؤ سکھائے ہوئے ہیں

کچھ ستارے مری پلکوں پہ چمکتے ہیں ابھی

کچھ ستارے مرے سینے میں سمائے ہوئے ہیں

اب وہ انسان کہاں جن سے فرشتے شرمائیں

ہم تو انسان کا بس بھیس بنائے ہوئے ہیں

غیر کو جمع کرو دشمن جاں کو بلواؤ

دوستو ہم کسی اپنے کے ستائے ہوئے ہیں

ارشد عبدالحمید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(382) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arshad Abdul Hamid, Mere Ashaar Tamooj Pey Ju Aaye Hue Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arshad Abdul Hamid.