Har Ik Fasana Zaroorat Se Kuch Ziada Hai

ہر اک فسانہ ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

ہر اک فسانہ ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

غم زمانہ ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

کسی کو علم نہیں کون کتنا پاگل ہے

جنوں دوانہ ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

ذرا سی بات پہ وہ ہم سے روٹھ جاتا ہے

اسے منانا ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

جو ہم نے سیکھا جو مانا وہ کتنا کم نکلا

جو ہم نے جانا ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

ہم ایسے شہر میں ہیں جس میں ملک بستے ہیں

یہاں خزانہ ضرورت سے کچھ زیادہ ہے

ارشد لطیف

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(416) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arshad Lateef, Har Ik Fasana Zaroorat Se Kuch Ziada Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 9 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arshad Lateef.