Jab Main Iss Admi Se Dorr Hua

جب میں اس آدمی سے دور ہوا

جب میں اس آدمی سے دور ہوا

غم مری زندگی سے دور ہوا

میں بھی اس کے مکان سے نکلا

وہ بھی میری گلی سے دور ہوا

دل سے کانٹا نکالنے کے بعد

درد اپنی کمی سے دور ہوا

وہ سمجھتا رہا کہ روئے گا

میں بڑی خامشی سے دور ہوا

راستے میں جو اک سمندر تھا

میری تشنہ لبی سے دور ہوا

وہ جسے مجھ سے دور ہونا تھا

میں تو ارشدؔ اسی سے دور ہوا

ارشد لطیف

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(416) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arshad Lateef, Jab Main Iss Admi Se Dorr Hua in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 9 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arshad Lateef.