Aurat

بنایا ہے مصور نے حسیں شہکار عورت کو

بنایا ہے مصور نے حسیں شہکار عورت کو

الگ پہچان دیتا ہے کہانی کار عورت کو

وہ ماں ہو بہن بیوی یا کہ بیٹی ہو سنو لوگو

ہر اک کردار میں رکھا گیا غم خوار عورت کو

یہی سچ مچ بنا دے گی ترے گھر کو حسیں جنت

ذرا تم پیار سے کرنا کبھی سرشار عورت کو

پھر اک دن ان کی قسمت میں لکھی جاتی ہے رسوائی

زمانے میں سمجھتے ہیں جو کاروبار عورت کو

اسی کا روپ دھارے پھر رہی ہیں کچھ چڑیلیں بھی

میں عورت ہی نہیں کہتا کسی مکار عورت کو

سلام ان عورتوں پر جو کہ مائیں ہیں شہیدوں کی

سلامی پیش کرتا ہوں میں سو سو بار عورت کو

مجھے اس وقت ارشدؔ کیوں مری ماں یاد آتی ہے

کسی کٹیا میں دیکھوں جب کسی لاچار عورت کو

ارشد محمود ارشد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(750) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arshad Mahmood Arshad, Aurat in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 13 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arshad Mahmood Arshad.