Saaray Din Ki Thaki ,

سارے دن کی تھکی،

سارے دن کی تھکی،

ویران اور بے مصرف رات کو

ایک عجیب مشغلہ ہاتھ آ گیا ہے

اب وہ!

سارے شہر کی آوارہ پرچھائیوں کو

جسم دینے کی کوشش میں مصروف ہے

مجھے معلوم ہے

اگر گم نام پرچھائیوں کو

ان کی پہچان مل گئی

تو شہر کے معزز اور عبادت گزار شریف زادے

ہم شکل پرچھائیوں کے خوف سے

پرچھائیوں میں تبدیل ہو جائیں گے

اور

بے مصرف دن بھر کی تھکی ہوئی رات کو

ایک اور مشغلہ مل جائے گا

آشفتہ چنگیزی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(553) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ashufta Changezi, Saaray Din Ki Thaki , in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 76 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ashufta Changezi.