Aarzu-e-dawam Karta Hun

آرزوئے‌ دوام کرتا ہوں

آرزوئے‌ دوام کرتا ہوں

زندگی وقف عام کرتا ہوں

آپ سے اختلاف ہے لیکن

آپ کا احترام کرتا ہوں

مجھ کو تقریب سے تعلق کیا

میں فقط اہتمام کرتا ہوں

درس و تدریس عشق مزدوری

جو بھی مل جائے کام کرتا ہوں

جستجو ہی مرا اثاثہ ہے

جا اسے تیرے نام کرتا ہوں

ہاں مگر برگ زرد کی صورت

صبح کو میں بھی شام کرتا ہوں

وقت گزرے پہ آئے ہو اسلمؔ

خیر کچھ انتظام کرتا ہوں

اسلم کولسری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(570) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Aslam Kolsari, Aarzu-e-dawam Karta Hun in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 26 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Aslam Kolsari.