Wo Kasie Auratain Thi

وہ کیسی عورتیں تھیں

وہ کیسی عورتیں تھیں

جو گیلی لکڑیوں کو پھونک کر چولہا جلاتی تھیں

جو سل پر سرخ مرچیں پیس کر سالن پکاتی تھیں

سحر سے شام تک مصروف لیکن مسکراتی تھیں

بھری دوپہر میں سر اپنا جو ڈھک کر ملنے آتی تھیں

جو پنکھے ہاتھ کے جھلتی تھیں اور بس پان کھاتی تھیں

جو دروازے پہ رک کر دیر تک رسمیں نبھاتی تھیں

پلنگوں پر نفاست سے دری چادر بچھاتی تھیں

بصد اصرار مہمانوں کو سرہانے بٹھاتی تھیں

اگر گرمی زیادہ ہو تو روح افزا پلاتی تھیں

جو اپنی بیٹیوں کو سوئیٹر بننا سکھاتی تھیں

سلائی کی مشینوں پر کڑے روزے بتاتی تھیں

بڑی پلیٹوں میں جو افطار کے حصے بناتی تھیں

جو کلمے کاڑھ کر لکڑی کے فریموں میں سجاتی تھیں

دعائیں پھونک کر بچوں کو بستر پر سلاتی تھیں

اور اپنی جا نمازیں موڑ کر تکیہ لگاتی تھیں

کوئی سائل جو دستک دے اسے کھانا کھلاتی تھیں

پڑوسن مانگ لے کچھ با خوشی دیتی دلاتی تھیں

جو رشتوں کو برتنے کے کئی نسخے بتاتی تھیں

محلے میں کوئی مر جائے تو آنسو بہاتی تھیں

کوئی بیمار پڑ جائے تو اس کے پاس جاتی تھیں

کوئی تہوار ہو تو خوب مل جل کر مناتی تھیں

وہ کیسی عورتیں تھیں

میں جب گھر اپنے جاتی ہوں تو فرصت کے زمانوں میں

انہیں ہی ڈھونڈھتی پھرتی ہوں گلیوں اور مکانوں میں

کسی میلاد میں جزدان میں تسبیح دانوں میں

کسی بر‌ آمدے کے طاق پر باورچی خانوں میں

مگر اپنا زمانہ ساتھ لے کر کھو گئی ہیں وہ

کسی اک قبر میں ساری کی ساری سو گئی ہیں وہ

اسنی بدر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1130) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Asna Badr, Wo Kasie Auratain Thi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 15 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Asna Badr.