Dil Main Hasrat Koi Bachi Hi Nahi

دل میں حسرت کوئی بچی ہی نہیں

دل میں حسرت کوئی بچی ہی نہیں

آگ ایسی لگی بجھی ہی نہیں

اس نے جب خود کو بے نقاب کیا

پھر کسی کی نظر اٹھی ہی نہیں

جیسا اس بار کھل کے روئے ہم

ایسی بارش کبھی ہوئی ہی نہیں

زندگی کو گلے لگاتے کیا

زندگی عمر بھر ملی ہی نہیں

منتظر کب سے چاند چھت پر ہے

کوئی کھڑکی ابھی کھلی ہی نہیں

میں جسے اپنی زندگی سمجھا

سچ تو یہ ہے وہ میری تھی ہی نہیں

عزم شاکری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1656) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Azm Shakri, Dil Main Hasrat Koi Bachi Hi Nahi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Azm Shakri.