Main Tum Ko Bhool Bhi Sakta Hon Is Jahan Ke Liye

میں تم کو بھول بھی سکتا ہوں اس جہاں کے لئے

میں تم کو بھول بھی سکتا ہوں اس جہاں کے لئے

ذرا سا جھوٹ ضرور ہے داستاں کے لئے

مرے لبوں پہ کوئی بوند ٹپکی آنسو کی

یہ قطرہ کافی تھا جلتے ہوئے مکاں کے لئے

میں کیا دکھاؤں مرے تار تار دامن میں

نہ کچھ یہاں کے لئے ہے نہ کچھ وہاں کے لئے

غزل بھی اس طرح اس کے حضور لایا ہوں

کہ جیسے بچہ کوئی آئے امتحاں کے لئے

بشیر بدر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(2295) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Bashir Badr, Main Tum Ko Bhool Bhi Sakta Hon Is Jahan Ke Liye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 75 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Bashir Badr.