Betaye Deti Hai Be Pouchye Raaz Sab Dil Ke

بتائے دیتی ہے بے پوچھے راز سب دل کے

بتائے دیتی ہے بے پوچھے راز سب دل کے

نگاہ شوق کسی کی نگاہ سے مل کے

نکالے حوصلے مقتل میں اپنے بسمل کے

نثار تیغ کے قربان ایسے قاتل کے

میں اس پہ صدقے جو جائے کسی کی یاد میں جاں

کسی کو چاہے میں قربان جاؤں اس دل کے

بڑی اداؤں سے لی جان اپنے کشتے کی

ہزار بار میں قربان اپنے قاتل کے

غبار قیس نہیں ہے تو کون ہے لیلیٰ

کوئی تو ہے کہ جو پھرتا ہے گرد محمل کے

وہ پھوٹ بہنے میں مشاق ہیں یہ رونے میں

رہیں گے دب کے نہ آنکھوں سے آبلے دل کے

مہار ناقۂ لیلیٰ تو کھینچ لے اے آہ

ہٹا دے دست طلب بڑھ کے پردے محمل کے

وہ دل میں ہیں مگر آنکھوں سے دور ہیں بیدمؔ

پڑا ہوا ہوں میں پیاسا قریب ساحل کے

بیدم شاہ وارثی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(754) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of BEDAM SHAH WARSI, Betaye Deti Hai Be Pouchye Raaz Sab Dil Ke in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 58 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of BEDAM SHAH WARSI.