Har Gaam Zindagi Main Ajeeb Sanhe Hue

ہر گام زندگی میں عجب سانحے ہوئے

ہر گام زندگی میں عجب سانحے ہوئے

اپنے پرائے جانچنے کے تجربے ہوئے

اک ڈائری پرانی مرے ہاتھ کیا لگی

یادوں کے زرد پیڑ یکایک ہرے ہوئے

اے دل سنبھال ضبط کہ پشتے لرز اٹھے

انکھوں سے بہہ نہ جائیں یہ دریا رکے ہوئے

آنکھوں میں دیکھ شہر خموشاں کا سا سکوت

پلکوں پہ دیکھ غم کے فسانے لکھے ہوئے

بلقیسؔ اک چراغ سر راہ کیا رکھا

بستی کے ہر مکان ہی میں تبصرے ہوئے

بلقیس خان

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(344) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Bilqees Khan, Har Gaam Zindagi Main Ajeeb Sanhe Hue in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Bilqees Khan.