Jab Woh Buut Hum Kalaam Hota Hai

جب وہ بت ہم کلام ہوتا ہے

جب وہ بت ہم کلام ہوتا ہے

دل و دیں کا پیام ہوتا ہے

ان سے ہوتا ہے سامنا جس دن

دور ہی سے سلام ہوتا ہے

دل کو روکوں کہ چشم گریاں کو

ایک ہی خوب کام ہوتا ہے

آپ ہیں اور مجمع اغیار

روز دربار عام ہوتا ہے

زیست سے تنگ ہیں نہ چھیڑ ہمیں

دیکھ غصہ حرام ہوتا ہے

لیجے موسیٰ سے لن ترانی کی

اب تو ہم سے کلام ہوتا ہے

داغؔ کا نام سن کے وہ بولے

آدمی کا یہ نام ہوتا ہے

داغؔ دہلوی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(273) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of DAGH DEHLVI, Jab Woh Buut Hum Kalaam Hota Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 125 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of DAGH DEHLVI.