مشہور شاعر دانیال طریر کی شاعری ۔ نظمیں اور غزلیں

بکھرنے کا سبب مٹی پہ لکھتا جا رہا ہوں

دانیال طریر

تسلسل سے گماں لکھا گیا ہے

دانیال طریر

آواز کا نوحہ

دانیال طریر

جنوں کیا سات رنگوں سے ملا ہے

دانیال طریر

دل تمناؤں کی تخلیق پر مامور رہے

دانیال طریر

آئینے سے مکالمہ

دانیال طریر

اندھیرا بھی دیا ہے

دانیال طریر

مر گیا رات کو برف اوڑھے ہوئے ایک فٹ پاتھ پر

دانیال طریر

سبز اطلس کا تلک لے کے تجھے دیکھوں گا

دانیال طریر

سرخ لمحوں کی کسک لے کے تجھے دیکھوں گا

دانیال طریر

بلا جواز نہیں ہے فلک سے جنگ مری

دانیال طریر

اک طرزِ پُراسرار میں دیکھا ہے خدا خیر

دانیال طریر

نظم گو کے لیے مشورہ

دانیال طریر

اک اور اندھا کباڑی

دانیال طریر

اِتمام

دانیال طریر

گیا کہ سیلِ رواں کا بہاؤ ایسا تھا

دانیال طریر

برائے فروخت

دانیال طریر

خواب جزیرہ بن سکتے تھے نہیں بنے

دانیال طریر

مگر…

دانیال طریر

کشش ہر ایک کو ہر ایک کو طلسم دیا

دانیال طریر

اُجالا ہی اُجالا ، روشنی ہی روشنی ہے

دانیال طریر

چاند ہو بھی تو سمندر نہیں ہونے والا

دانیال طریر

ڈر لگتا ہے ٹوٹ نہ جائے سپنوں والی باڑ

دانیال طریر

نیند بیچی جا رہی ہے کاروبار خواب ہے

دانیال طریر

Records 1 To 24 (Total 56 Records)