Mohabbat Chor Di Mein Ne Tu Dil Kamil Nahi Ho Ga

محبت چھوڑ دی مَیں نے تو دل کامِل نہیں ہو گا

محبت چھوڑ دی مَیں نے تو دل کامِل نہیں ہو گا

ریاضت چھوڑ دی تو حشر کے قابل نہیں ہو گا

ندامت کی جو قیمت ہے وہ تُودینے سے قاصر ہے

درِ توبہ کھلا ہے، تُو مگر داخل نہیں ہو گا

اسے بتلاؤ توبہ تین چیزوں کا مرکب ہے

کہو، اب کھوکھلے لفظوں سے کچھ حاصل نہیں ہو گا

کبھی لگتا ہے میں راحت میں اُس کو دور رکھوں گا

کبھی لگتا ہے وہ تکلیف میں شامل نہیں ہو گا

عماد احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(501) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Emad Ahmad, Mohabbat Chor Di Mein Ne Tu Dil Kamil Nahi Ho Ga in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 22 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Emad Ahmad.