Rehta Hoon Main Apne Gher Main

رہتا ہوں میں اپنے گھر میں

رہتا ہوں میں اپنے گھر میں

لیکن ہیں اشعار سفر میں

انسانوں کے کارن پنچھی

بیٹھے ہیں چپ چاپ شجر میں

ہمت کر کے کہہ دیتا ہوں

کیا رکھا ہے اتنے ڈر میں

سر کٹنے کی نوبت آئی

سودا ایک سمایا سر میں

کربل دکھتا تھا احمدص کو

بیٹے دکھتے تھے دختر میں

کتنی چاہت ہوتی ہے نا؟

آ جائیں ہم لوگ خبر میں

ان کے پاس ہے چابی گھر کی

نقب لگا سکتے ہیں در میں

تکتے ہیں روشن دنیا کو

جیتے ہیں اندھیر نگر میں

مجھ پر بھی احسان ہے ان کا

میں بھی ہوں اک پاک نظر میں

فخر عباس

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(238) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fakhar Abbas, Rehta Hoon Main Apne Gher Main in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 44 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fakhar Abbas.