Jab Tak Meray HonToN Pe Tera Naam Rahay Ga

جب تک مرے ہونٹوں پہ ترا نام رہے گا

جب تک مرے ہونٹوں پہ ترا نام رہے گا

دل بے خبر گردش ایام رہے گا

مٹ جائے گا ہر نقش خیال غم ہستی

لیکن ورق دل پہ ترا نام رہے گا

کیوں ڈر ہے گناہوں کے سبب حشر کے دن سے

ہم جانتے ہیں ان کا کرم عام رہے گا

پیغام تو آئیں گے بہت دیر و حرم سے

لیکن تری چوکھٹ سے مجھے کام رہے گا

مے خانہ سلامت ہے اگر تیری نظر کا

لبریز مئے عشق سے ہر جام رہے گا

دامن ہے اگر تیرا مرے دست طلب میں

آغاز سے بہتر مرا انجام رہے گا

جائے گی نہ دل سے ترے عارض کی محبت

زلفوں کا تصور مجھے ہر شام رہے گا

آنکھیں ہی نہیں تیری فناؔ دید کے قابل

تو جلوہ گہہ یار میں ناکام رہے گا

فنا بلند شہری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1728) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fana Bulandshehri, Jab Tak Meray HonToN Pe Tera Naam Rahay Ga in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Social Urdu Poetry. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fana Bulandshehri.