Guzar Gaya Intzar Had Say Yeh Wada Natamam Kab Tak

گزر گیا انتظار حد سے یہ وعدۂ ناتمام کب تک

گزر گیا انتظار حد سے یہ وعدۂ ناتمام کب تک

نہ مرنے دے گی مجھے ستم گر تری تمنائے خام کب تک

اجل مرا اتنا کام کر دے کہ کام میرا تمام کر دے

رہے کوئی زندگی کے ہاتھوں جہاں میں رسوائے عام کب تک

وہ آئے یا وعدے پر نہ آئے بلا سے قسمت جو کچھ دکھا دے

مگر ہمیں دیکھنا تو یہ ہے کہ آج ہوتی ہے شام کب تک

یہ بحث و تکرار چھوڑ دے آ یہ زہد کا عہد توڑ دے

رہے گی اے مدعی حرمت شراب دنیا حرام کب تک

فانی بدایونی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(949) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fani Badayuni, Guzar Gaya Intzar Had Say Yeh Wada Natamam Kab Tak in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 102 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fani Badayuni.