Chhipkali

چھپکلی

حجلۂ تاریک میں پائی ہے اس نے پرورش

شمع جلتے ہی در و دیوار پر

لے کے مٹیالا سا کاہیدہ بدن

جھومتی سر مست آ جاتی ہے یہ

پا بجولاں چند پروانوں کے پاس

غوطہ زن پاتے ہی جن کو آبشار نور میں

تیز چمکیلی نکیلی آنکھ سے

یوں دیکھتی ہے بار بار

جیسے اک سرمایہ دار

مال و زر کی اوٹ سے

کرتا ہے مفلس کا شکار

پھر نکل جاتی ہے یہ

سوز و غم کے شاہکار

روشنی کے تاجدار

چند پروانوں کی جاں سوزی سے کیا مطلب اسے

شمع کی روشنی خیالی اس کے پیچھے گرد ہے

حجلۂ تاریک میں پائی ہے اس نے پرورش

فرید عشرتی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(636) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fareed Ishrati, Chhipkali in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 16 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fareed Ishrati.