MaiN Shola E Izhar HuN Kotaah HuN Qad Tak

میں شعلۂ اظہار ہوں کوتاہ ہوں قد تک

میں شعلۂ اظہار ہوں کوتاہ ہوں قد تک

وسعت مری دیکھو تو ہے دیوار ابد تک

ماحول میں سب گھولتے ہیں اپنی سیاہی

رخ ایک ہی تصویر کے ہیں نیک سے بد تک

کچھ فاصلے ایسے ہیں جو طے ہو نہیں سکتے

جو لوگ کہ بھٹکے ہیں وہ بھٹکیں گے ابد تک

کب تک کوئی کرتا پھرے کرنوں کی گدائی

ظلمت کی کڑی دھوپ تو ڈستی ہے ابد تک

یوں روٹھے مقدر کہ کوئی کام نہ بن پائے

یوں ٹوٹے سہارا کوئی پہنچے نہ مدد تک

اب بھی ترے نزدیک موحد نہیں فارغؔ

اقرار کیا ہے ترا انکار کی حد تک

فارغ بخاری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(831) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Farigh Bukhari, MaiN Shola E Izhar HuN Kotaah HuN Qad Tak in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Farigh Bukhari.