Aakhir Charagh E Dard E Mohabbat Bujha Diya

آخر چراغ درد محبت بجھا دیا

آخر چراغ درد محبت بجھا دیا

سر سے کسی کی یاد کا پتھر گرا دیا

ڈھونڈے جنم جنم بھی تو دنیا نہ پا سکے

یوں ہم نے اس کو اپنی غزل میں چھپا دیا

خوشبو سے اس کی جسم کی آنگن مہک اٹھا

کمرے کو اس نے اپنی ہنسی سے سجا دیا

یہ کس کے انتظار میں جھپکی نہیں پلک

یہ کس نے مجھ کو راہ کا پتھر بنا دیا

کیا کم ہے جعفریؔ کہ مشینوں کے شور نے

لوگوں کو اپنے آپ سے ملنا سکھا دیا

فضیل جعفری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(3768) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fuzail Jafry, Aakhir Charagh E Dard E Mohabbat Bujha Diya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fuzail Jafry.