Har Samt Lahoo Rang GhaTa Chhai Si KioN Hae

ہر سمت لہو رنگ گھٹا چھائی سی کیوں ہے

ہر سمت لہو رنگ گھٹا چھائی سی کیوں ہے

دنیا مری آنکھوں میں سمٹ آئی سی کیوں ہے

کیا مثل چراغ شب آخر ہے جوانی

شریانوں میں اک تازہ توانائی سی کیوں ہے

در آئی ہے کیوں کمرے میں دریاؤں کی خوشبو

ٹوٹی ہوئی دیواروں پہ للچائی سی کیوں ہے

میں اور مری ذات اگر ایک ہی شے ہیں

پھر برسوں سے دونوں میں صف آرائی سی کیوں ہے

فضیل جعفری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(437) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fuzail Jafry, Har Samt Lahoo Rang GhaTa Chhai Si KioN Hae in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fuzail Jafry.