Dil Chorana Yeh Kaam Hae Tera

دل چرانا یہ کام ہے تیرا

دل چرانا یہ کام ہے تیرا

لے گیا ہے تو نام ہے تیرا

ہے قیامت بپا کہ جلوے میں

قامت خوش خرام ہے تیرا

جس نے عالم کیا ہے زیر و زبر

یہ خط مشک فام ہے تیرا

دید کرنے کو چاہئیں آنکھیں

ہر طرف جلوہ عام ہے تیرا

کس کا یہ خوں کیے تو آتا ہے

دامن افشاں تمام ہے تیرا

ہو نہ ہو تو ہماری مجلس میں

تذکرہ صبح و شام ہے تیرا

تیغ ابرو ہمیں بھی دے اک زخم

سر پہ عالم کے دام ہے تیرا

تو جو کہتا ہے مصحفیؔ ادھر آ

مصحفیؔ کیا غلام ہے تیرا

غلام ہمدانی مصحفی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1240) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ghulam Hamdani Mushafi, Dil Chorana Yeh Kaam Hae Tera in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Social Urdu Poetry. Also there are 51 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ghulam Hamdani Mushafi.