Friendship Poetry of Habib Jalib - Friendship Shayari

حبیب جالب کی دوستی شاعری

یہ اور بات تیری گلی میں نہ آءیں ہم

Ye Aur Baat Teri Gali Mein Na Ayen Hum

(Habib Jalib) حبیب جالب

یہ زندگی گزار رہے ہیں جوہم یہاں

Ye Zindaghi Guzar Rahe Hain Jo Hum Yahan

(Habib Jalib) حبیب جالب

کوئی ممنون فرنگی کوئی ڈالر کا غلام

Koi Mamnoon E Farangi Koi Dollar Ka Ghulam

(Habib Jalib) حبیب جالب

یہ اور بات تیری گلی میں نہ آئیں ہم

Ye Aur Baat Teri Gali Mein Na Aayen Hum

(Habib Jalib) حبیب جالب

تو رنگ ہے،غبار ہیں تیری گلی کے لوگ

Tu Rang Hai Gabar Hain Teri Gali Ke Laug

(Habib Jalib) حبیب جالب

شب کو چاند اور دن کو سورج بن کر روپ دکھاتی ہو

Shab Ko Chand Aur Dil Ko Suraj Ban Kar Roup Dikhati Ho

(Habib Jalib) حبیب جالب

تو کلی نزہتوں نکہتوں میں پلی

Tu Kali Nazhatun Nikhatun Mein Pali

(Habib Jalib) حبیب جالب

ریستوران میں بیٹھو اور کانٹے سے کھانا کھائو

Restaurant Mein Betho Aur Kante Se Khana Khao

(Habib Jalib) حبیب جالب

نہ ڈگمگائے کبھی ہم وفا کے رستے میں

Na Daghmagai Kabhi Hum Wafa Ke Raste Mein

(Habib Jalib) حبیب جالب

تیرے لیے میں کیا کیا صدمے سہتا ہوں

Tere Liye Mein Kia Kia Sadme Sehta Hun

(Habib Jalib) حبیب جالب

ابھی جو پاس سے گزری ہے خاک اڑاتی ہوئی

Abhi Jo Paas Se Guzri Hai Khaak Udati Hoe

(Habib Jalib) حبیب جالب

آخر کار یہ ساعت بھی قریب آ پہنچی

Aakhir Kar Ye Saat Bhi Qareeb Aapohanchi

(Habib Jalib) حبیب جالب

وہ بھی خائف نہیں تختئہ دار سع

Wo Bhi Khaif Nahin Takhtaa E Dar Se

(Habib Jalib) حبیب جالب

کہیں آہ بن کےلب پر ترا نام نہ آءے

Kahin Aah Ban Ke Lab Par Tera Naam Na Aajaye

(Habib Jalib) حبیب جالب

جی دیکھا ہے مردیکھا ہے

Ji Dekha Hai Mar Dekha Hai

(Habib Jalib) حبیب جالب

اس شہر خرابی میں غم عشق کے مارے

Is Shehar E Kharabi Mein Gham E Ishq Ke Mare

(Habib Jalib) حبیب جالب

میں تجھے پھول کہوں اور کہوں بھونروں سے

Mein Tujhe Phool Kahon Aur Kahon Bhonwaron Se

(Habib Jalib) حبیب جالب

غزلیں تو کہی ہیں کچھ ہم نے ان سے نہ کہا احوال تو کیا

Ghazalen To Kahin Hai Kuch Humne Us Se Na Kaha Ahwaal To Kia

(Habib Jalib) حبیب جالب

دل والوکیوں دل کی دولت یوں بیکار لٹاتے ہو

Dil Walo Kiyu Dl Ki Dolat Yun Beqar Lutate Ho

(Habib Jalib) حبیب جالب

دل کی بات لبوں پر لاکر اب تک ہم دکھ سہتے ہیں

Dil Ki Labon Par La Kar Ab Tak Hum Dukh Sehte Hain

(Habib Jalib) حبیب جالب

درخت سوکھ گئے رک گئے ندی نالے

Darakh Sokh Gaye Ruk Gaye Nadi Nale

(Habib Jalib) حبیب جالب

دن بھر کافی ہائوس میں بیٹھے کچھ دلبے پتلے نقاد

Din Bhar Coffee House Mein Bethe Kuch Buble Patle Naqad

(Habib Jalib) حبیب جالب

گھر سے نکلے کار میں بیٹھے

Ghar Se Nikale Car Mein Bethe

(Habib Jalib) حبیب جالب

Friendship Shayari of Habib Jalib - Poetry of Friendship. Read the best collection of Friendship poetry by Habib Jalib, Read the famous Friendship poetry, and Friendship Shayari by the poet. Friendship Nazam and Friendship Ghazals of the poet. The best collection of Shayari by Habib Jalib online. You can also read different types of poetries by the poet including Friendship Shayari from different books of the poet.