Nazar Nazar Main Liye Tera Pyar Phirtay Hain

نظر نظر میں لیے تیرا پیار پھرتے ہیں

نظر نظر میں لیے تیرا پیار پھرتے ہیں

مثال موج نسیم بہار پھرتے ہیں

ترے دیار سے ذروں نے روشنی پائی

ترے دیار میں ہم سوگوار پھرتے ہیں

یہ حادثہ بھی عجب ہے کہ تیرے دیوانے

لگائے دل سے غم روزگار پھرتے ہیں

لئے ہوئے ہیں دو عالم کا درد سینے میں

تری گلی میں جو دیوانہ وار پھرتے ہیں

بہار آ کے چلی بھی گئی مگر جالبؔ

ابھی نگاہ میں وہ لالہ زار پھرتے ہیں

حبیب جالب

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(2910) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعری

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Habib Jalib, Nazar Nazar Main Liye Tera Pyar Phirtay Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 76 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Habib Jalib.