Milta Hai Har Chirag Ko Saya Zameen Per

ملتا ہے ہر چراغ کو سایا زمین پر

ملتا ہے ہر چراغ کو سایا زمین پر

رہتا نہیں ہے کوئی اکیلا زمین پر

ہر ایک نقش اس کا ہوا لے کے اڑ گئی

کھینچا تھا ہم نے شوق کا نقشہ زمین پر

بدلے ہوئے سے لگتے ہیں اب موسموں کے رنگ

پڑتا ہے آسمان کا سایا زمین پر

گوشہ ذرا سا کوئی اماں کا کہیں ملے

جی تنگ ہو گیا ہے کشادہ زمین پر

ہر ایک موج رک سی گئی سانس کی طرح

بہتا نہیں ہے اب کہیں دریا زمین پر

وہ جن کو میرے گھر کا نشاں بھی نہیں ملا

حیراں ہیں مجھ کو دیکھ کے زندہ زمین پر

ہمدم کاشمیری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(570) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hamdam Kashmiri, Milta Hai Har Chirag Ko Saya Zameen Per in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 26 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hamdam Kashmiri.