Yeh Fizaye Neelgun Yeh Baal O Par Kafi Nahi

یہ فضائے نیلگوں یہ بال و پر کافی نہیں

یہ فضائے نیلگوں یہ بال و پر کافی نہیں

ماہ و انجم تک مرا ذوق سفر کافی نہیں

ایک ساعت اک صدی ہے اک نظر آفاق گیر

اب نظام گردش شام و سحر کافی نہیں

پھر جنوں کو وسعت افلاک ہے کوہ ندا

اے دل دیوانہ دشت پر خطر کافی نہیں

یہ ہوائے نم یہ سینے میں سلگتی آگ سی

آہ یہ عمر رواں کی رہگزر کافی نہیں

پھر مشیت سے الجھتی ہے مری دیوانگی

نالۂ شبگیر اشکوں کے گہر کافی نہیں

آرزوئے بے کراں ہے اور جسم ناتواں

کیا رگ جاں کے لیے یہ نیشتر کافی نہیں

خنکیٔ شبنم سے غنچہ کو نہیں تسکین قلب

زخم گل کو اب نسیم چارہ گر کافی نہیں

شیشۂ شب میں بھری ہے فوقؔ جو صہبائے کیف

قطرہ قطرہ بھی پیوں تو رات بھر کافی نہیں

حنیف فوق

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(631) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hanif Fouq, Yeh Fizaye Neelgun Yeh Baal O Par Kafi Nahi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 11 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hanif Fouq.