Ugg Nahi Sakta Kisi Khorak Say

اُگ نہیں سکتا کسی خوراک سے

اُگ نہیں سکتا کسی خوراک سے

عشق اُترا ہے فقط افلاک سے

کر رہا تھا میں رفو جس کا لباس

کر دیے اس نے ہی دامن چاک سے

جانتا ہوں ان کے اندر کا فریب

جن کے لہجے ہیں بظاہر پاک سے

دل کے بدل دل ہی کرتے ہیں طلب

ہو گئے ہیں ہم بھی اب چالاک سے

سوچ کر ہی دستِ دل کرنا دراز

آدمی ہیں ہم بڑے بے باک سے

خیر تو ہے کیا ہوا کس نے کیا

آپ بھی رہنے لگے نمناک سے

جاہ سے نہ شان و شوکت سے حیات

مجھ کو نسبت ہے وطن کی خاک سے

حیات عبداللہ

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1020) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hayaat Abdullah, Ugg Nahi Sakta Kisi Khorak Say in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 2 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hayaat Abdullah.