Hum Apne Raftgaan Ko Yaad Rakhna Chahte Hain

ہم اپنے رفتگاں کو یاد رکھنا چاہتے ہیں

ہم اپنے رفتگاں کو یاد رکھنا چاہتے ہیں

دلوں کو درد سے آباد رکھنا چاہتے ہیں

مبادا مندمل زخموں کی صورت بھول ہی جائیں

ابھی کچھ د ن یہ گھر برباد رکھنا چاہتے ہیں

بہت رونق تھی ان کے دم قدم سے شہرِ جاں میں

وہی رونق ہم ان کے بعد رکھنا چاہتے ہیں

بہت مشکل زمانوں میں بھی ہم اہلِ محبت

وفا پر عشق کی بنیاد رکھنا چاہتے ہیں

سروں میں ایک ہی سودا کہ لو دینے لگے خاک

امیدیں حسبِ استعداد رکھنا چاہتے ہیں

کہیں ایسا نہ ہو حرفِ دُعا مفہوم کھو دے

دُعا کو صورتِ فریاد رکھنا چاہتے ہیں

قلم آلودۂ نان و نمک رہتا ہے پھر بھی

جہاں تک ہو سکے آزاد رکھنا چاہتے ہیں

افتخار عارف

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(250) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Iftikhar Arif, Hum Apne Raftgaan Ko Yaad Rakhna Chahte Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 108 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Iftikhar Arif.