Quaid RA K Hazoor

قائد ؒکے حضور

ے اثر ہو گئے سب حرف و نوا تیرے بعد

کیا کہیں دِل کا جو احوال ہُوا تیرے بعد

تُو بھی دیکھے تو ذرا دیر کو پہچان نہ پائے

ایسی بدلی ترے کُوچے کی فِضا تیرے بعد

اور تو کیا کسی پیماں کی حفاظت ہوتی

ہم سے اِک خواب سنبھالا نہ گیا تیرے بعد

کیا عجب دن تھے کہ مقتل کی طرح شہر بہ شہر

بین کرتی ہوئی پھرتی تھی ہوا تیرے بعد

ترے قدموں کو جو منزل کا نشاں جانتے تھے

بھُول بیٹھے تیرے نقشِ کف ِپا تیرے بعد

مہر و مہتاب دو نِیم، ایک طرف خواب دو نِیم

جو نہ ہونا تھاوہ سب ہو کے رہا تیرے بعد

افتخار عارف

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(216) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Iftikhar Arif, Quaid RA K Hazoor in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Social, Friendship, Hope Urdu Poetry. Also there are 108 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Social, Friendship, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Iftikhar Arif.