Wafa Ki Khair Manata Hon Be Wafai Main Bhi

وفا کی خیر مناتا ہوں بے وفائی میں بھی

وفا کی خیر مناتا ہوں بے وفائی میں بھی

میں اس کی قید میں ہوں قید سے رہائی میں بھی

لہو کی آگ میں جل بجھ گئے بدن تو کھلا

رسائی میں بھی خسارہ ہے نارسائی میں بھی

بدلتے رہتے ہیں موسم گزرتا رہتا ہے وقت

مگر یہ دل کہ وہیں کا وہیں جدائی میں بھی

لحاظ حرمت پیماں نہ پاس ہم خوابی

عجب طرح کے تصادم تھے آشنائی میں بھی

میں دس برس سے کسی خواب کے عذاب میں ہوں

وہی عذاب در آیا ہے اس دہائی میں بھی

تصادم دل و دنیا میں دل کی ہار کے بعد

حجاب آنے لگا ہے غزل سرائی میں بھی

میں جا رہا ہوں اب اس کی طرف اسی کی طرف

جو میرے ساتھ تھا میری شکستہ پائی میں بھی

افتخار عارف

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(202) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Iftikhar Arif, Wafa Ki Khair Manata Hon Be Wafai Main Bhi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 60 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Iftikhar Arif.