Uss Ne Jate Hue Kaha Badla

اس نے جاتے ہوئے کہا بدلہ

اس نے جاتے ہوئے کہا بدلہ

خود سے لوں گا میں اب ترا بدلہ

سخت سردی میں چائے آرڈر کی

ہم نے موسم سے لے لیا بدلہ

اس دوپٹے کو چھو کے وعدہ کر

جو بھی بدلا وہ پائے گا بدلہ

میں ترے نام کر تو دوں لیکن

دل بلوچن کا چاہے گا بدلہ

ایک شاعر سے بد تمیزی کا

ہم نے شعروں میں لے لیا بدلہ

یہ مری تربیت نہیں ورنہ

میں بتاتی تمہیں ہے کیا بدلہ

میں تو چپ ہوں مگر مرے دشمن

تم سے لے گا مرا خدا بدلہ

تیری دستار بھی ہے دامن بھی

میں نے پھر بھی نہیں لیا بدلہ

میں تری بے بسی سے واقف ہوں

مجھ پہ جائز نہیں رہا بدلہ

عشق اور ہجر کی مصیبت سے

میں نے لینا تھا اور لیا بدلہ

ہاں یہ سچ ہے بدل گئی ایماںؔ

کیونکہ تم سے تھا اب روا بدلہ

ایمان قیصرانی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(754) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Iman Qaisrani, Uss Ne Jate Hue Kaha Badla in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 13 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Iman Qaisrani.