تشنا رکھا ہے نہ سرشار کیا ہے اُس نے

(6009) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments