Hamara Dil Woh Gul Hai Jis Ko Zulff Yaar Mein Dekha

ہمارا دل وہ گل ہے جس کو زلف یار میں دیکھا

ہمارا دل وہ گل ہے جس کو زلف یار میں دیکھا

جو زلفیں ہو گئیں برہم گلے کے ہار میں دیکھا

بھلا گل کیا ترا ہم سر ہو جس کی یہ حقیقت ہے

ابھی گلشن میں دیکھا تھا ابھی بازار میں دیکھا

بصیرت جب ہوئی پیدا ہمیں مشق تصور سے

جو کچھ خلوت میں دیکھا تھا ابھی بازار میں دیکھا

چمن میں اک بت نازک ادا محو تماشا ہے

نیا گل آج ہم نے دامن گلزار میں دیکھا

جلیلؔ اک ناز کی قیمت دل و جاں دین و ایماں ہے

عجب انداز ہم نے حسن کے بازار میں دیکھا

جلیلؔ مانک پوری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(738) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of JALEEL MANIKPURI, Hamara Dil Woh Gul Hai Jis Ko Zulff Yaar Mein Dekha in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 66 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of JALEEL MANIKPURI.