Gzran Hain Guzarte Rehtay Hain

گزراں ہیں گزرتے رہتے ہیں

گزراں ہیں گزرتے رہتے ہیں

ہم میاں جان مرتے رہتے ہیں

ہائے جاناں وہ ناف پیالہ ترا

دل میں بس گھونٹ اترتے رہتے ہیں

دل کا جلسہ بکھر گیا تو کیا

سارے جلسے بکھرتے رہتے ہیں

یعنی کیا کچھ بھلا دیا ہم نے

اب تو ہم خود سے ڈرتے رہتے ہیں

ہم سے کیا کیا خدا مکرتا ہے

ہم خدا سے مکرتے رہتے ہیں

ہے عجب اس کا حال ہجر کہ ہم

گاہے گاہے سنورتے رہتے ہیں

دل کے سب زخم پیشہ ور ہیں میاں

آن ہا آن بھرتے رہتے ہیں

جون ایلیا

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1403) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Jaun Elia, Gzran Hain Guzarte Rehtay Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 195 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Jaun Elia.