Khud Se Rishtay Rahay Kahan Un Ke

خود سے رشتے رہے کہاں ان کے

خود سے رشتے رہے کہاں ان کے

غم تو جانے تھے رائیگاں ان کے

مست ان کو گماں میں رہنے دے

خانہ برباد ہیں گماں ان کے

یار سکھ نیند ہو نصیب ان کو

دکھ یہ ہے دکھ ہیں بے اماں ان کے

کتنی سرسبز تھی زمیں ان کی

کتنے نیلے تھے آسماں ان کے

نوحہ خوانی ہے کیا ضرور انہیں

ان کے نغمے ہیں نوحہ خواں ان کے

جون ایلیا

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1248) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Jaun Elia, Khud Se Rishtay Rahay Kahan Un Ke in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 195 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Jaun Elia.