Sham Hui Hai Yaar Aaye Hain Yaron Ke Hum Raah Chalain

شام ہوئی ہے یار آئے ہیں یاروں کے ہم راہ چلیں

شام ہوئی ہے یار آئے ہیں یاروں کے ہم راہ چلیں

آج وہاں قوالی ہوگی جونؔ چلو درگاہ چلیں

اپنی گلیاں اپنے رمنے اپنے جنگل اپنی ہوا

چلتے چلتے وجد میں آئیں راہوں میں بے راہ چلیں

جانے بستی میں جنگل ہو یا جنگل میں بستی ہو

ہے کیسی کچھ نا آگاہی آؤ چلو ناگاہ چلیں

کوچ اپنا اس شہر طرف ہے نامی ہم جس شہر کے ہیں

کپڑے پھاڑیں خاک بہ سر ہوں اور بہ عز و جاہ چلیں

راہ میں اس کی چلنا ہے تو عیش کرا دیں قدموں کو

چلتے جائیں چلتے جائیں یعنی خاطر خواہ چلیں

جون ایلیا

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1384) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Jaun Elia, Sham Hui Hai Yaar Aaye Hain Yaron Ke Hum Raah Chalain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 195 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Jaun Elia.