Dil Ko Bass Aik Ishaara Kijye

دل کو بس ایک اشارہ کیجے

دل کو بس ایک اشارہ کیجے

دیکھیے کیسے چلا چلتا ہے

وہ مرے ساتھ نہ چل پائے گا

اُسکے چلنے سے پتہ چلتا ہے

کیا بتاؤں تمہیں دنیا کا چلن

کہ یہاں چلتا ہُوا چلتا ہے

ایسے چلتا ہے ترے ہجر میں وقت

جیسے اِک آبلہ پا چلتا ہے

تیرے سِکّے ہی میں ہو گا کوئی کھوٹ

بھائی اپنا تو بڑا چلتا ہے

جواد شیخ

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(596) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Jawad Sheikh, Dil Ko Bass Aik Ishaara Kijye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Friendship Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Friendship poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Jawad Sheikh.