Yeh Tu Sab Mante Hain K Dil Ki Buri Nahi

سب یہ تو مانتے ہیں کہ دل کی بُری نہیں

سب یہ تو مانتے ہیں کہ دل کی بُری نہیں

لیکن وہ کچھ بھی کہتے ہوئے سوچتی نہیں

اُس کا خدا کی ذات پہ کامل یقین ہے

ویسے وہ دیکھنے میں بہت مذہبی نہیں

ورنہ تو دشت چھوڑ کے چل ہی دیا تھا میں

مجنوں پکار اٹھا کہ نہیں مرشدی نہیں

کوئی نہیں کہ جس کے گلے لگ کے روئیے

سالا اَپُن کے گھر میں کوئی پیڑ بھی نہیں

کوئی نہیں کہ جس پہ کیا جائے اعتبار

میں اپنی بات کر رہا ہوں آپ کی نہیں

سنتے ہی جیسے دل کی طنابیں اُکھڑ گئیں

جب بھی کسی نے مجھ سے کہا تم وہی نہیں؟

دنیا کی بے رخی سے نہ ہو اس قدر ملول

جواد اپنے دن بھی پھریں گے ، کوئی نہیں

جواد شیخ

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1803) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Jawad Sheikh, Yeh Tu Sab Mante Hain K Dil Ki Buri Nahi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Jawad Sheikh.