Layi Phir Aik Laghzish Mastana Tairay Shehar Mein

لائی پھر ایک لغزش مستانہ تیرے شہر میں

لائی پھر اک لغزش مستانہ تیرے شہر میں

پھر بنیں گی مسجدیں مے خانہ تیرے شہر میں

آج پھر ٹوٹیں گی تیرے گھر کی نازک کھڑکیاں

آج پھر دیکھا گیا دیوانہ تیرے شہر میں

جرم ہے تیری گلی سے سر جھکا کر لوٹنا

کفر ہے پتھراؤ سے گھبرانا تیرے شہر میں

شاہ نامے لکھے ہیں کھنڈرات کی ہر اینٹ پر

ہر جگہ ہے دفن اک افسانہ تیرے شہر میں

کچھ کنیزیں جو حریم ناز میں ہیں باریاب

مانگتی ہیں جان و دل نذرانہ تیرے شہر میں

ننگی سڑکوں پر بھٹک کر دیکھ جب مرتی ہے رات

رینگتا ہے ہر طرف ویرانہ تیرے شہر میں

کیفی اعظمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(332) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of KAIFI AZMI, Layi Phir Aik Laghzish Mastana Tairay Shehar Mein in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 27 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of KAIFI AZMI.