Mere Aaina Main Tum Sorat E Zeeba Dekho

میرے آئینہ میں تم صورت زیبا دیکھو

میرے آئینہ میں تم صورت زیبا دیکھو

تم نے اب تک جو نہ دیکھا ہو وہ جلوا دیکھو

اک جہاں دعوت نظارہ ہے کیا کیا دیکھو

حسن دیدار طلب کا بھی تماشا دیکھو

جاگتی آنکھوں کے خوابوں کی بھی تعبیریں ہوں

خواب کل رات جو دیکھا تھا ادھورا دیکھو

ہے وہی مولیٰ وہی اپنا وکیل اور نصیر

تم یہود اور نصاریٰ کا سہارا دیکھو

کرۂ ارض بھی محور سے ہٹا جاتا ہے

بے جہت حسن کا اک یہ بھی تماشا دیکھو

سرمۂ شمس و قمر راحت چشم نرگس

دل بینا سے ہی کیفیت فردا دیکھو

کہکشاں لوٹ دی ہے ہاتھ بڑھا کر ہم نے

اب خلا سے بھی پرے جا کے اجالا دیکھو

ہم خلاؤں سے بھی انگارے لپک لیتے ہیں

کس جگہ گرتا ہے ٹوٹا ہوا تارا دیکھو

نئی دنیا میں نئے چاند ستارے لاؤ

قادریؔ نے بھی لگایا ہے یہ شوشہ دیکھو

خالد حسن قادری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(433) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Khalid Hasan Qadiri, Mere Aaina Main Tum Sorat E Zeeba Dekho in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 8 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Khalid Hasan Qadiri.