Yun Hi Sir Charh Ke Har Ik Mouj Bulaa Bolay Gi

یوں ہی سر چڑھ کے ہر اک موج بلا بولے گی

یوں ہی سر چڑھ کے ہر اک موج بلا بولے گی

ہم جو خاموش رہیں گے تو ہوا بولے گی

بولتا رہتا ہے جو آج سر شاخ انا

چپ سی لگ جائے گی جس روز فنا بولے گی

تجھ سے امید کسے ہے مری لیلائے حیات

محمل ناز سے کیا چشم عطا بولے گی

وہ تو رہتا ہے یوں ہی اپنے گلستان میں گم

لب خاموش سے کیا برگ حنا بولے گی

موسم نعرۂ بلبل بھی کبھی آئے گا

اس سے مایوس نہ ہو خلق خدا بولے گی

مہتاب حیدر نقوی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(234) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Mahtab Haider Naqvi, Yun Hi Sir Charh Ke Har Ik Mouj Bulaa Bolay Gi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 41 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Mahtab Haider Naqvi.