Makhmoor Saeedi Poetry, Makhmoor Saeedi Shayari

مخمور سعیدی - Makhmoor Saeedi

1938 - 2010 تانی

Poetry of Makhmoor Saeedi, Urdu Shayari of Makhmoor Saeedi

مخمور سعیدی کی شاعری

وہ دور نشاط دیدہ و دل جیسے بس ابھی گزرا ہی تو ہے

Woh Dour Nishat Dedaa O Dil Jaisay Bas Abhi Guzra Hi To Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

یاد پھر بھولی ہوئی ایک کہانی آئی

Yaad Phir Bholi Hoi Aik Kahani Aayi

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

یہ کیسا ربط ہوا دل کو تیری ذات کے ساتھ

Yeh Kaisa Rabt Howa Dil Ko Teri Zaat Ke Sath

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

سن لی صدائے کوہ ندا اور چل پڑے

Sun Li Sadaye Koh Nida Our Chal Paray

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

شہر اجڑے ہوئے خوابوں کے بسائے کیا کیا

Shehr Ujre Howay Khowaboon Ke Basaye Kya Kya

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

سینے میں کسک بن کے اترنے کے لیے ہے

Senay Main Kasak Ban Ke Utrney Ke Liye Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

مجھ میں کسی کا عکس نہ پرتو خالی آئینہ ہوں میں

Mujh Mein Kisi Ka Aks Nah Partu Khali Aaina Hon Mein

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

نہ کم ہوا ہے نہ ہو سوز اضطراب دروں

Nah Kam Howa Hai Nah Ho Soaz Iztiraab Daroon

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

نہ رستہ نہ کوئی ڈگر ہے یہاں

Nah Rasta Nah Koi Dagar Hai Yahan

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لجا لجا کے ستاروں سے مانگ بھرتی ہے

Laja Laja Ke Sitaron Say Mang Bharti Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لکھ کر ورق دل سے مٹانے نہیں ہوتے

Likh Kar Waraq Dil Say Mitanay Nahi Hotay

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لجا لجا کے ستاروں سے مانگ بھرتی ہے

Laja Laja Ke Sitaron Say Mang Bharti Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لکھ کر ورق دل سے مٹانے نہیں ہوتے

Likh Kar Waraq Dil Say Mitanay Nahi Hotay

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لجا لجا کے ستاروں سے مانگ بھرتی ہے

Laja Laja Ke Sitaron Say Mang Bharti Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لکھ کر ورق دل سے مٹانے نہیں ہوتے

Likh Kar Waraq Dil Say Mitanay Nahi Hotay

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لجا لجا کے ستاروں سے مانگ بھرتی ہے

Laja Laja Ke Sitaron Say Mang Bharti Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لکھ کر ورق دل سے مٹانے نہیں ہوتے

Likh Kar Waraq Dil Say Mitanay Nahi Hotay

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

کتنی دیواریں اٹھی ہیں ایک گھر کے درمیاں

Kitni Diivarain Othi Hain Aik Ghar Ke Darmia

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لبوں پہ ہے جو تبسم تو آنکھ پر نم ہے

Labon Pay Hai Jo Tabasum To Aankh Par Num Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

لفظوں کے سیہ پیراہن میں لپٹی ہوئی کچھ تنویریں ہیں

Lafzon Ke Siya Pairahan Main Lipti Hoi Kuch Tanverain Hain

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

جب کوئی شام حسیں نذر خرابات ہوئی

Jab Koi Sham Hsin Nazar Khrabat Hoi

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

کسک پرانے زمانے کی ساتھ لایا ہے

Kasak Puranay Zamanay Ki Sath Laya Hai

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

خوار و رسوا نہ سر کوچہ و بازار ملے

Khawar O Ruswa Nah Sir Kocha O Bazar Milay

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

جب کوئی شام حسیں نذر خرابات ہوئی

Jab Koi Sham Hsin Nazar Khrabat Hoi

(Makhmoor Saeedi) مخمور سعیدی

Records 1 To 24 (Total 43 Records)

Makhmoor Saeedi was born in Tonk (Rajasthan) on 31st Dec 1938. His father, Ahmed Khan Nazish was also a significant Urdu poet. Makhmuur got his early education from Tonk and went to Agra for futher studies His poetic collections include Sabrang, Seah bar Safed, Awaaz ka jism, Aate Jaate lamhon ki sada, Guftanii, Baans ke jangalon se guzarti havaa, Diivaar-o-dar ke darmiyan, Umr-e-guzishta ka hisab (in two volumes), Raasta aur main, etc

Urdu Poetry & Shayari of Makhmoor Saeedi. Read Ghazals, Sad Poetry, Social Poetry, Heart Broken Poetry of Makhmoor Saeedi, Ghazals, Sad Poetry, Social Poetry, Heart Broken Poetry and much more. There are total 43 Urdu Poetry collection of Makhmoor Saeedi published online.